Arrow right close
soc una dona
اپنی حفاظت کریں Search open
Languages image description
soc una dona

اطلاع کاری

کرائم وکٹم سپورٹ آفس (Oficina d’Atenció a la Víctima del Delicte) یا وکٹم سپورٹ گروپ (Grop d’Atenció a la Víctima) سے معلومات حاصل کریں۔

اپنے جارح کی اطلاع دینے کے لیے وکٹم سپورٹ گروپس کے ماہرین کی مدد طلب کریں۔

پولیس اسٹیشن میں اور اپنی رپورٹ درج کرانے سے پہلے، قانونی امداد کے وکیل کا مطالبہ کریں اور، اگر ضرورت ہو تو ترجمہ کی خدمت طلب کریں۔

واقعات کو ترتیب وار اور ٹھوس الفاظ میں بیان کریں، تفصیل سے بتائیں کہ وہ واقعات کہاں پیش آئے اور کیا وہاں بچے موجود تھے۔

اگر آپ کے پاس ثبوت اور گواہ ہیں تو، انہیں اپنی رپورٹ کے ساتھ منسلک کریں۔

اگر آپ کے پاس سماجی خدمات کی طرف سے کوئی رپورٹ ملی ہے تو اسے اپنی رپورٹ کے ساتھ منسلک کریں۔

اگر حملے لگاتار ہوتے رہے ہیں جس میں سماجی خدمات کی مداخلت ہوئی ہے، تو ان کی مداخلتوں کی فہرست کو رپورٹ میں منسلک کریں۔

جسمانی یا جنسی حملہ کے ليے، ثبوت کی خاطر میڈیکل رپورٹ طلب کریں اور اسے اپنی رپورٹ کے ساتھ منسلک کریں۔ جارح کی شناخت کریں۔

تحفظ کے آرڈر کی درخواست کریں۔

رپورٹ پر دستخط کرنے سے پہلے، چیک کریں کہ کیا حقائق کو صحیح طریقہ سے بیان کیا گیا ہے اور اس کی ایک نقل طلب کریں۔ اگر آپ کو ضرورت ہو تو اس کا ترجمہ کرنے کی درخواست کریں۔

اگر آپ تحفظ کا آرڈر طلب کرتی ہیں تو آپ کو اگلے 72 گھنٹوں کے اندر جج کے سامنے حاضر ہونا پڑے گا اور حتمی فیصلہ سنانے تک وہ ایک درست حکم پاس کرے گی/گا۔ سماعت کے دوران، عدالت کے پاس لازمی طور پر ایک حفاظتی کمرہ ہونا چاہئے تاکہ جارح آپ کے رابطہ میں نہ آسکے۔ تحفظ کا آرڈر جج کو احتیاطی مجرمانہ اور شہری اقدامات کرنے کی اجازت دیتا ہے نیز سماجی نگہداشت کے اقدامات جیسے عام پابندی، مواصلات پر پابندی لگانے یا بچوں کو تحویل میں لینے کی ترغیب دیتا ہے۔

اگر آپ اب اپنے جارح کے ساتھ تعلقات میں نہیں ہیں یا اب اس کے ساتھ نہیں رہ رہی ہیں

کبھی بھی اس سے اکیلے نہ ملیں: تنہائی خطرہ کا سبب ہے۔

جہاں تک ممکن ہو، اپنی نئی تفصیلات (پتہ، فون نمبر، مقام کار، وغیرہ) نہ دیں۔

عوامی نیٹ ورک کے پیشہ ور افراد سے صلاح لیں اور اپنی حفاظت خود کریں۔

اگر آپ کے بچے چھوٹے ہیں تو ان کے اسکول کو صورتحال کی وضاحت کریں اور انھیں بتائیں کہ بچوں کو کون لینے آئے گا۔

اگر وہ آپ کے بچوں سے ملتا ہے تو جس پر آپ کو بھروسہ ہے اس کو انتظامات کا انچارج بنادیں یا ایک میٹنگ پوائنٹ سروس کا استعمال کریں۔ کسی بھی حالت میں آپ کو تنہا نہیں جانا چاہئے۔

اگر قانونی تحفظ کے اقدامات جاری کر دیئے گئے ہیں

اگر وہ تحفظ کے آرڈر کی خلاف ورزی کرتا ہے تو 900 120 120 پر کال کریں یا پولیس اسٹیشن جائیں۔

اگر آپ ایک ہی فلیٹ میں رہتی ہیں تو تالے تبدیل کر دیں اور جارح کو کبھی بھی کسی بھی حالت میں اندر نہ آنے دیں۔

اپنے ارد گرد کے لوگوں کا ایک ایسا نیٹ ورک بنانے کی کوشش کریں جو آپ کو خبردار کریں اور اگر اس کو آپ کے آس پاس دیکھتے ہیں: مثلا آپ کے پڑوس میں، مقام کار پر، اسکول وغیرہ میں تو 900 120 120 پر متنبہ کریں۔

تحفظ آرڈر کی ایک نقل ہمیشہ اپنے ساتھ رکھیں۔

جارح سے کسی بھی قسم کے رابطہ سے گریز کریں۔ پچھتاوا تشدد کے دور میں ایک دوسرا مرحلہ ہے۔ دباؤ میں نہ آئیں اور کبھی بھی اپنے آپ کو مجرم محسوس نہ کریں: قابل الزام شخص صرف جارح ہے۔

اگر جارح تحفظ کے آرڈر کی خلاف ورزی کرتا ہے تو وہ قانون توڑ ے گا، بھلے ہی آپ اسے اپنے قریب آنے دیں۔

جنسی حملے کے لیے

جلد سے جلد جارح سے دور کسی محفوظ جگہ پر جائیں۔

اپنے آپ کو مجرم محسوس نہ کریں یا اپنے طرز عمل کے بارے میں رائے قائم نہ کریں؛ آپ کا جارح پوری طرح سے قصوروار ہے۔

کسی ایسے شخص سے فورا رابطہ کریں جس پر آپ اعتماد کرتے ہیں جو آپ کی مدد کر سکے اور آپ کے ساتھ رہ سکے۔

حملہ کا ثبوت رکھیں: نہ دھوئیں، نہ شاور لیں، نہ نہائیں، دانت برش نہ کریں یا غرارے نہ کریں، کپڑے نہ بدلیں، نہ کھائیں نہ پیئں اور اگر ممکن ہو تو پیشاب اور پاخانہ بھی نہ کریں کیونکہ ان سے وہ ثبوت تبدیل ہو سکتے ہیں جن کا استعمال اس کی شناخت کرنے اور اسے گرفتار کرنے کے لیے کیا جا سکتا ہے۔

جتنی جلدی ہو سکے قریبی اسپتال کے ایمرجنسی ڈیپارٹمنٹ میں جائیں۔

اگر آپ نابالغ یا بہت کم عمر کی ہیں تو آپ کسی قابل اعتماد بالغ شخص سے مدد طلب کرسکتی ہیں۔

اس کی اطلاع دیں۔

ڈیجیٹل تشدد کے ليے

اپنے آپ کو مجرم محسوس نہ کریں یا اپنے طرز عمل کے بارے میں رائے قائم نہ کریں؛ آپ کا جارح پوری طرح سے قصوروار ہے۔

غنڈہ گردی کے ثبوت کو ختم نہ کریں: بات چیت، ای میل، تصاویر وغیرہ آپ شاید ان سب کو مٹانا چاہیں کیونکہ آپ خود کو مجرم سمجھتی ہیں اور نہیں چاہتی ہیں کہ ان سب چیزوں کا پتہ لگے، یا جو کچھ ہو رہا ہے اس کے بارے میں بھولنا چاہتی ہیں۔ اس ثبوت کو رکھنا ضروری ہے کیونکہ پولیس اس کو بدمعاش کو ڈھونڈنے اور جرم ثابت کرنے کے لیے استعمال کرسکتی ہے۔

کسی بالغ سے مدد طلب کریں۔ اگرچہ آپ مجرم یا شرم محسوس کرسکتی ہیں، لیکن یاد رکھیں کہ واحد شخص جو آپ کو اس صورتحال سے نکالنے میں مدد کرسکتا ہے وہ قابل اعتماد بالغ ہے۔

قانونی کارروائی کریں۔ اس کی اطلاع دیں۔ جب آپ اس کی اطلاع دیں تو اپنے والدین یا کسی قابل اعتماد بالغ کے ساتھ کام کریں۔ اگر آپ غنڈہ گردی بند کرنا چاہتی ہیں تو یہ ضروری ہے۔

اگر آپ کو خطرہ محسوس ہوتا ہے

صورتحال کے بارے میں کسی کو بتائیں جس پر آپ کو اعتماد ہے اور ان سے کہیں کہ وہ معلومات تلاش کرنے میں آپ کی مدد کریں۔

900 120 120 پر کال کریں یا میونسپلٹی سوشل سروسز یا پولیس کے پاس جائیں تاکہ وہ اس سے بچاؤ کے اقدامات کرسکیں تاکہ یہ یقینی بنایا جا سکے کہ صورتحال مزید خراب نہ ہو۔

اپنے جارح کو مطلع کیے بغیر دھمکیوں اور حملوں کا ایک نوٹ تیار کریں۔ شروع سے ختم ہونے تک حقائق، تاریخوں، مقامات اور گواہوں کی تفصیلات بتائیں۔

صورت حال مزید خراب ہونے کی صورت میں تیاریاں کریں

جو کچھ بھی ہو رہا ہے اس کے بارے میں کسی ایسے شخص کو بتائیں جس پر آپ بھروسہ کرتی ہیں، ان کے ساتھ بچ نکلنے کا منصوبہ تیار کریں اور ہنگامی پاس ورڈ بنائیں۔

اپنی ضروری چیزوں کو ہمیشہ تیار رکھیں: مثلا فون، چابیاں، پیسے، اپنے دستاویزات اور، اپنے بچے، اگر آپ کے پاس ہیں۔ ضرورت پڑنے پر کاپیاں بنائیں۔

اگر آپ کے بچے ہیں جو آپ پر منحصر ہیں تو ان کو یہ بتانے کے لیے ایک پاس ورڈ بنائیں کہ انہیں گھر سے باہر نکلنا ہے اور اگر ضرورت ہو تو ہنگامی صورت حال میں 112 پر کال کرنا سیکھیں۔

اگر آپ خود کو پُرتشدد صورتحال میں پاتی ہیں

900 120 120 پر کال کرنے کی کوشش کریں یا اس شخص کی موجودگی میں پاس ورڈ استعمال کریں جس پر آپ اعتماد کرتی ہیں۔

اگر آپ کر سکتی ہیں تو اپنے آپ کو ایک کمرہ میں بند کر لیں اور وہاں سے کال کریں۔ اگر آپ وقت پر یہ نہیں کر پاتی ہیں یا آپ اپنا فون حاصل کرنے سے قاصر رہتی ہیں تو، زور سے شور مچائیں تاکہ باہر کا کوئی شخص آپ کی آواز سن لے اور آپ کے لیے مدد کا مطالبہ کرے۔

بہترین کمرہ وہ ہے جو دروازہ کے قریب ترین ہو کیونکہ وہاں سے باہر نکلنا آسان ہوتا ہے۔ اگر آپ ایسا نہیں کرسکتی ہیں تو پڑوسیوں کے ليے کھڑکی یا اندرونی آنگن سے آپ کی آواز کا سننا آسان ہوگا۔

باورچی خانے اور دوسرے کمروں سے دور رہیں جہاں خطرناک چیزیں ہو سکتی ہیں۔

اگر آپ بچ نکلنے سے قاصر ہوں تو اپنے کمزور ترین حصوں: مثلا سر، چہرہ اور سینے کی حفاظت کریں۔

اپنے بچوں کے ليے گھر سے نکلنے یا کمرے میں بند ہونے کے ليے ایک نشان بنائیں۔

حملے کے بعد

جلد سے جلد باہر نکلیں، اس سے قطع نظر کہ آپ کا جارح جا چکا ہے، کیوں کہ وہ واپس آسکتا ہے۔

ایک محفوظ جگہ تلاش کریں، اپنے قابل اعتماد شخص کو بتائیں اور 900 120 120 پر کال کریں۔

اگر آپ گھر سے باہر نہیں نکل سکتیں یا پولیس اسٹیشن یا میڈیکل سینٹر نہیں جاسکتی ہیں تو، 900 120 120 پر کال کریں۔

اگر آپ کو چوٹیں لگی ہیں تو کسی ہسپتال میں جائیں، اس کی وجہ بتائيں اور انجری رپورٹ مانگیں تاکہ کسی قانونی کارروائی میں جو آپ لینے کا فیصلہ کرسکتی ہیں اس کے ثبوت کے طور پر استعمال ہو سکے۔

جب تک پولیس نہ پہنچے اس جگہ پر کسی چیز کو ہاتھ نہ لگائیں جہاں پر حملہ ہوا تھا یا خود اپنے آپ کو، اور تمام ثبوت رکھیں: مثلا ٹوٹی ہوئی چیزیں، پھٹے ہوئے کپڑے، نشان اور زخم وغیرہ۔

واقعات کے گواہ تلاش کریں، اگر کوئی موجود تھا۔

گھر چھوڑنا

اگر آپ جارح کے ساتھ رہتی ہیں اور وہاں سے چھوڑ کر جانے کے بارے میں سوچ رہی ہیں تو، اس بارے میں کبھی بھی اس سے یا اس کے حلقہ کے لوگوں سے بات نہ کریں۔

یہ بات ہمیشہ یاد رکھیں کہ آپ کی دستاویزات اور بچے کہاں ہیں، اگر آپ کے بچے ہوں، (شناختی دستاویزات، قانونی دستاویزات، گھر، صحت، بینک، اسکول، وغیرہ سے متعلق دستاویزات) ۔

یہ بات ہمیشہ یاد رکھیں کہ آپ کے فون، گھر کی چابیاں اور کار کی چابیاں (اگر آپ کے پاس ہیں) کہاں ہیں۔

جس شخص پر آپ کو اعتماد ہے اس کو آگاہ رکھیں۔

پبلک نیٹ ورک (سوشل سروسز وغیرہ) کے پیشہ ور افراد کو باخبر رکھیں۔

کپڑے اور سامان کا بیگ تیار کریں (اگر ممکن ہو تو، کسی ایسے شخص کے گھر پر چھوڑ دیں جس پر آپ اعتماد کرتی ہیں)۔

اپنے پیسے یا بینک اکاؤنٹ کو اپنے جارح کے علم میں نہ آنے دیں۔

اگر آپ نے پچھلے مواقع پر بدسلوکی کی اطلاع دی ہے تو، اس سے متعلق دستاویزات اپنے ساتھ رکھیں۔

اگر آپ کر سکتی ہیں تو جب آپ کا جارح گھر پر نہ ہو تب وہاں سے نکلنے کا منصوبہ بنائيں۔

جب آپ گھر سے نکل جائیں تو، اپنا فون نمبر تبدیل کر دیں، جہاں آپ عام طور پر جاتی ہیں ان جگہوں پر بار بار جانا بند کر دیں اور اپنے معمولات کو تبدیل کرلیں۔ سوشل میڈیا کا استعمال بند کر دیں۔

اپنے فون اور دیگر تمام الکٹرانک آلات پر جغرافیائی مقام کے اختیارات کو غیر فعال کر دیں۔

اگر آپ کے جارح کے ساتھ آپ کے بچے ہیں تو، رجسٹرڈ فیکس (بوروفیکس) کے ذریعہ اسے آگاہ کریں کہ آپ نے گھر چھوڑ دیا ہے۔

اگر آپ کو لگتا ہے کہ آپ کو خطرہ ہے تو اس کی اطلاع دیں اور حفاظتی آرڈر طلب کریں۔

مفت خدمات — 124 زبانیں — دن کے 24 گھنٹے — سال کے 365 دن